fbpx
Ajmal Dawakhana
jaryaan, zakawat e hiss ka ilaj, qatray aane ka ilaj, zakawat e hiss ka nuskha, zakawat e hiss home remedies

JIRYAN KA HERBAL ILAJ | WAJOOHAT |ALAMAT | GHARELU TOTKY | (HERBAL TREATMENT FOR SPERMATORRHEA)

Jiryan mardon k nizam e toleed ki aik bemari hai jis main mard hazraat ky azzu e khas madah e manni az khud kharij hona shuru ho jati hai. Agar raat k waqat mani ka nikalna az khud sy ho to isy ehtelam kaha jata hai or agar din k waqat kaam karny k doran ho to isy jaryan kaha jata hai.

Agar kisi mard ko hafty main 2-3 bar jiryan ka masla pesh aye or sath main chakkar, tangon main kamzori, kamar main dard or neend na aye to issy kasrat-e-jiryan ki bemari samjha jata hai.

Aam tor pay nojwan ehtelam  ko jaryan samjhny ki ghalti kar dety hain or samjhty hain k agar azu e khaas sy garha pani kharij jo to isy jiryan kaha jata hai haalan ky aesa nahi hai. Jiryan din k waqat azu e khaas sy az khud kharij hony waly madah ko kaha jata hai. Aik haaliya andazy k mutabiq yeh marz 10 main sy 3 mardon ko ho sakta hai.

Yeh baat bhe sach hai k madah manni he insani jisam ki bunyad hai or is k az khud kharij hony sy jisam kamzor par jata hai jis sy kai doosry amraz bhe lahaq ho sakty hain. Yad rahy k agar yahi alamaat agar khawateen main mojood hon to isy leucorrhoea ka marz kaha jata hai.

TIBB-E-UNANI KI RU SE JIRYAN KA ILAJ

Jaryaan aik aisi bemari hai jiska agar sahi sy ilaj na kiya jaye to yeh mardana kamzori or namardi ka sabab bhe ban sakti hai. Tibb e Unani main jaryan ka ilaj (jiryan treatment) mojood hai jo bina kisi muzar asraat k kamyaab tareen ilaj samjha jata hai.Jesy k hum sab janty hain k tibb e Unani main amraaz ka ilaj jarri botiyon sy kiya jata hai, isi tarha peshab main mani ka ilaj bhe tibb e Unani main mojood hain jo k sadiyon sy azmudah or mujarrab ilaj samjha jata hai.

herbal cure for spermatorreah

JIRYAN KI ALAMAAT

  • Shadeed jismani thakawat
  • Bhook ka na lagna ya kam lagna
  • Jismani or asaabi kamzori
  • Chakkar aana
  • Kamar main dard ka hona
  • Qabz ka rehna
  • Jazbati dabao ka shikar hona
  • Tawajo markooz karny main nakami
  • Madah manni ka peshab main ikhraj hona
  • Peshab ka bar bar aana
  • Azu e khas par kharish hona

JIRYAN KI 4 BARI WAJOOHAT

jaryan-ka-illaj

1. ZEHNI OR JISMANI DABAO

Aksar mard hazrat jo kamzor asaab k malik hoty hain un main jiryan hony ki bunyadi wajah zehni or jismani thakawat hoti hai. Din bhar k zehni or jismani dabao ki wajah sy aksar mard hazraat chalty phirty jiryan ka shikar ho jaty hain or aksar tabeebon sy mani k qatray ana jesi alamat k bary main puchty hain.

2. CIGARETTE OR SHARAB NOSHI

Cigarette or sharab noshi bhe jiryan ki aik wajah ho sakti hai q ky wo afraad jo kasrat sy cigarette or sharab noshi karty hain un k phepharon k sath sath unka nizam e toleedi bhe kamzor hota chala jata hain or aik waqat aesa bhe ata hai k intehai kamzori ky bais jiryan jesy masly ka samna karna parta hai.

3. JISMANI THAKAWAT

Wo afraad jo jismani tor par kamzor hoty hain or thora sa kaam karny ky baad shadeed thakawat mehsus karny lagty hain un ko bhe jiryan ki shikayat ho sakti hai.

4. NEEND KA NA AANA

JIryan ki bemari main jisam main bechaini bohat ziyada mehsus hoti hai isi wajah sy wo mard hazraat jin ko jiryan ki shikayat hoti hain aksar neend na aany jesy masail sy do chaar rehty hain jis ki wajeh sy unki jismani halat din ba din kamzor sy kamsor tar hoty chaly jati hai.

JIRYAN KA GHARELU ILAJ

1. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

AJZAA

  • Reetha (5-6 daany)
  • Cheeni (hasb e zaiqa)
  • Khali capsule (6 adad)

TARKEEB/ISTEMAL

Reetha ky daanon ko guthliyon sy alehda kar lain or dhoop main achi tarha khushk kar lain. Khushk karny ky baad is ka safoof bana lain. Phir is safoof k ham wazan cheeni mila lain or 6 khali capsule k khol main bhar kar mehfooz kar lain.Subh nehar munh 2 capsule pani ya doodh k sath istemal karain. Dawa istemal karny k kam az kam 3 ghanty baad nashta karain. Is ilaj ki muddat sirf 3 din hai isy 3 din sy ziyada istemal na karain warna kisi dusri bemari hony ka andesha hai.

2. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

Yeh nuskha purany sy purany jiryan ka ilaj hai or sailan ur reham jesy amraaz k liye bhe intehai mufeed hai.

AJZAA

  • Satawar 50 gram
  • Sang-e-jarahat khurdani 50 gram
  • Mishri 100 gram

TARKEEB/ISTEMAL

Tamam ajzaa ko koot kar pees lain or mehfooz kar lain. Subh o sham 1+1 chamach paani k sath istemal karain. Is nuskhay k hamrah baisan ki rotti or ghee ka istemal bhe ziyada sy ziyada karain.

3. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

AJZAA

  • Sufed Moosli 4 tolah
  • Saboos Ispaghol 2 tolah
  • Maghaz Tukham Tarhindi 1 tolah
  • Nabat 1 tolah

TARKEEB /ISTEMAL

Tamam ajzaa ko achi tarha koot kar pees lain or chaan kar safoof ki shakal main mehfooz kar lain. Aik chamach subh k waqat gaye k doodh k hamrah istemal karain. Is gharelu nuskhy ka ilaaj ka dorania kam az kam aik maah hai.

گھریلو ٹوٹکے | وجوہات | علامات | جریان کا ھربل علاج

جریان مرد حضرات کے نظام تولید کی ایک بیماری ہے جس میں مرد حضرات کے عضو خاص سے مادہ منی از خود خارج ہونا شروع ہو جاتا ہے۔ اگر یہی عمل رات سوتے وقت ہو تو اسے احتلام کہتے ہیں اور اگر دن کے وقت روز مرہ کے کام سرانجام دینے کے دوران ہو تو اسے جریان کہا جاتا ہے۔

اگر کسی مرد کو ہفتے میں 2-3 مرتبہ جریان کا مسئلہ پیش آئے اور ساتھ میں چکر، ٹانگوں میں کمزوری، کمر میں درد اور نیند نا آئے یا کم آئے تا اسے کثرت جریان کی بیماری سمجھا جاتا ہے۔

عام طور پر نوجوان احتلام کو جریان سمجھنے کی غلطی کر دیتے ہیں اور سمجھتے ہیں کہ اگر عضو خاص سے گاڑھا پانی خارج ہو تو اسے جریان کہا جاتا ہے حالانکہ ایسا نہیں ہے۔ جریان دن کے وقت عضو خاص سے از خود خارج ہونے والے مادہ کو کہا جاتا ہے۔ ایک حالیہ اندازے کے مطابق یہ مرض ہر 10 میں سے 3 مردوں کو لاحق ہے۔

یہ بات بھی سچ ہے کہ مادہ منی ہی انسانی جسم کی بنیاد ہے اور اس کے ازخود خارج ہونے سے جسم کمزورپڑ جاتا ہے جس سے کئی دوسرے امراض بھی لاحق ہو سکتے ہیں۔ یاد رہے کہ اگر یہی علامات اگر خواتین میں موجود ہوں تو اسے لیکوریا کا مرض کہا جاتا ہے۔

herbal cure for spermatorreah

:طب یونانی کی رو سے جریان کا علاج

جریان ایک ایسی بیماری ہے جسکا اگر سہی سے علاج نا کرایا جائے تو یہ مردانہ کمزوری اور نامردی جیسے مسائل کا سبب بنتی ہے۔ طب یونانی میں جریان کا علاج موجود ہے جو بنا کسی مضر اثرات کی کامیاب ترین علاج سمجھا جاتا ہے۔ جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں کہ طب یونانی میں امراض کا علاج جڑی بوٹیوں سے کیا جاتا ہے، اسی طرح پیشاب میں منی کا علاج بھی طب یونانی میں موجود ہے جو کہ صدیوں سے آزمودہ اور مجرب علاج سمجھا جاتا ہے۔

:جریان کی علامات

– شدید جسمانی تھکاوٹ

– بھوک کا نہ لگنا یا کم لگنا

– جسمانی اور اعصابی کمزوری

– چکر آنا

– کمر میں درد کا ہونا

– قبض کا رہنا

– جزباتی دباو کا شکار ہونا

– توجہ مرکوز کرنے میں ناکامی

– مادہ منی کا پیشاب میں اخراج ہونا

– پیشاب کا بار بار آنا

– عضو خاص پر خارش ہونا

:جریان کی چار بڑی وجوہات

jaryan-ka-illaj

:ذہنی اور جسمانی دباو

اکثر مرد حضرات جو کمزور اعصاب کے مالک ہوتے ہیں ان میں جریان ہونے کی بنیادی وجہ ذہنی اور جسمانی تھکاوٹ ہوتی ہے۔ دن بھر کےذہنی اور جسمانی دباو کی وجہ سے اکثر مرد حضرات چلتے پھرتے جریان کا شکار ہو جاتے ہیں اور اکثر طبیبوں سے پیشاب میں منی کے قطرے آنے جیسی علامات کے بارے میں پوچھتے ہیں۔

:سگریٹ اور شراب نوشی

سگریٹ اور شراب نوشی بھی جریان ہونے کی وجوہات میں سے ایک وجہ ہے۔ وہ افراد جو کثرت سے تمباکو اور شراب نوشی کرتے ہیں ان کے پھیپھڑوں کے ساتھ ساتھ انکا نظام تولیدی بھی کمزور ہوتا چلے جاتا ہے اور ایک وقت ایسا بھی آتا ہے کہ انتہائی کمزوری کے باعث جریان جیسے مسئلے کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

:جسمانی تھکاوٹ

ایسے افراد جو جسمانی طور پر کمزور ہوتے ہیں اور تھوڑا سا کام کرنے کے بعد شدید تھکاوٹ محسوس کرنے لگتے ہیں انکو بھی جریان کی شکایت ہو سکتی ہے۔

:نیند کا نہ آنا

جریان کی بیماری میں جسم میں بے چینی بہت زیادہ محسوس ہوتی ہے اسی وجہ سے وہ مرد حضرات جن کو جریان کی شکایت ہوتی ہے اکثر نیند نا آنے جیسے مسائل سے دوچار رہتے ہیں جس کی وجہ سے انکی جسمانی حالت دن بہ دن کمزور سے کمزور تر ہوتے چلے جاتی ہے۔

:جریان کا دیسی گھریلو علاج

:#جریان کا گھریلو علاج1

اجزا

ریٹھا 5-6 دانے

چینی حسب ذائقہ

خالی کیپسول 6 عدد

ترکیب / استعمال

ریٹھا کے دانوں کو گٹھلیوں سے علیحدہ کر لیں اور دھوپ میں اچھی طرح خشک کرلیں۔ خشک کرنے کے بعد اس کا سفوف بنا لیں۔ پھر سفوف کے ہم وزن چینی ملا لیں اور 6 عدد خالی کیپسولوں کے خول میں بھر کر محفوظ کرلیں۔ صبح نہار منہ دو عدد کیپسول پانی یا دودھ کے ساتھ استعمال کریں۔ دوا استعمال کرنے کے کم سے کم تین گھنٹے بعد ناشتہ کریں۔ یاد رہے کہ اس علاج کی مدت صرف تین دن ہے اسے تین دن سے زائد استعمال نہ کریں ورنہ کسی دوسری بیماری ہونے کا اندیشہ ہے۔

:#2جریان کا گھریلو علاج

اس نسخے کی مدد سے پرانے سے پرانی جریان کی بیماری کا علاج ممکن ہے۔ یہ نسخہ سیلان الرحم جیسے امراض کے لئے بھی انتہائی مفید ہے۔

اجزا

ستاور 50 گرام

سنگ جراحت خوردنی 50 گرام

مشری 100 گرام

ترکیب / استعمال

تمام اجزا کو کوٹ کر پیس لیں اور محفوظ کرلیں۔ صبح و شام1+1 چمچ پانی کے ساتھ استعمال کریں۔ اس نسخے ہمراہ بیسن کی روٹی اور گھی کا استعمال بھی زیادہ سے زیادہ کریں۔

:#3جریان کا گھریلو علاج

اجزا

سفید موصلی 4 تولہ

سبوس اسپغول 2 تولہ

مغز تخم ترہندی 1 تولہ

نبات 1 تولہ

ترکیب / استعمال

تمام اجزا کو اچھی طرح کوٹ کر پیس لیں اور چھان کر سفوف کی شکل میں محفوظ کرلیں۔ ایک چمچ صبح کے وقت گائے کے دودھ کے ہمراہ استعمال کریں۔ اس گھریلو نسخے کے علاج کا دورانیہ کم سے کم ایک ماہ ہے۔

JIRYAN KA HERBAL ILAJ

Jiryan mardon k nizam e toleed ki aik bemari hai jis main mard hazraat ky azzu e khas madah e manni az khud kharij hona shuru ho jati hai. Agar raat k waqat mani ka nikalna az khud sy ho to isy ehtelam kaha jata hai or agar din k waqat kaam karny k doran ho to isy jaryan kaha jata hai.

Agar kisi mard ko hafty main 2-3 bar jiryan ka masla pesh aye or sath main chakkar, tangon main kamzori, kamar main dard or neend na aye to issy kasrat-e-jiryan ki bemari samjha jata hai.

Aam tor pay nojwan ehtelam  ko jaryan samjhny ki ghalti kar dety hain or samjhty hain k agar azu e khaas sy garha pani kharij jo to isy jiryan kaha jata hai haalan ky aesa nahi hai. Jiryan din k waqat azu e khaas sy az khud kharij hony waly madah ko kaha jata hai. Aik haaliya andazy k mutabiq yeh marz 10 main sy 3 mardon ko ho sakta hai.

Yeh baat bhe sach hai k madah manni he insani jisam ki bunyad hai or is k az khud kharij hony sy jisam kamzor par jata hai jis sy kai doosry amraz bhe lahaq ho sakty hain. Yad rahy k agar yahi alamaat agar khawateen main mojood hon to isy leucorrhoea ka marz kaha jata hai.

TIBB-E-UNANI KI RU SE JIRYAN KA ILAJ

Jaryaan aik aisi bemari hai jiska agar sahi sy ilaj na kiya jaye to yeh mardana kamzori or namardi ka sabab bhe ban sakti hai. Tibb e Unani main jaryan ka ilaj (jiryan treatment) mojood hai jo bina kisi muzar asraat k kamyaab tareen ilaj samjha jata hai.Jesy k hum sab janty hain k tibb e Unani main amraaz ka ilaj jarri botiyon sy kiya jata hai, isi tarha peshab main mani ka ilaj bhe tibb e Unani main mojood hain jo k sadiyon sy azmudah or mujarrab ilaj samjha jata hai.

herbal cure for spermatorreah

JIRYAN KI ALAMAAT

  • Shadeed jismani thakawat
  • Bhook ka na lagna ya kam lagna
  • Jismani or asaabi kamzori
  • Chakkar aana
  • Kamar main dard ka hona
  • Qabz ka rehna
  • Jazbati dabao ka shikar hona
  • Tawajo markooz karny main nakami
  • Madah manni ka peshab main ikhraj hona
  • Peshab ka bar bar aana
  • Azu e khas par kharish hona

JIRYAN KI 4 BARI WAJOOHAT

jaryan-ka-illaj

1. ZEHNI OR JISMANI DABAO

Aksar mard hazrat jo kamzor asaab k malik hoty hain un main jiryan hony ki bunyadi wajah zehni or jismani thakawat hoti hai. Din bhar k zehni or jismani dabao ki wajah sy aksar mard hazraat chalty phirty jiryan ka shikar ho jaty hain or aksar tabeebon sy mani k qatray ana jesi alamat k bary main puchty hain.

2. CIGARETTE OR SHARAB NOSHI

Cigarette or sharab noshi bhe jiryan ki aik wajah ho sakti hai q ky wo afraad jo kasrat sy cigarette or sharab noshi karty hain un k phepharon k sath sath unka nizam e toleedi bhe kamzor hota chala jata hain or aik waqat aesa bhe ata hai k intehai kamzori ky bais jiryan jesy masly ka samna karna parta hai.

3. JISMANI THAKAWAT

Wo afraad jo jismani tor par kamzor hoty hain or thora sa kaam karny ky baad shadeed thakawat mehsus karny lagty hain un ko bhe jiryan ki shikayat ho sakti hai.

4. NEEND KA NA AANA

JIryan ki bemari main jisam main bechaini bohat ziyada mehsus hoti hai isi wajah sy wo mard hazraat jin ko jiryan ki shikayat hoti hain aksar neend na aany jesy masail sy do chaar rehty hain jis ki wajeh sy unki jismani halat din ba din kamzor sy kamsor tar hoty chaly jati hai.

JIRYAN KA GHARELU ILAJ

1. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

AJZAA

  • Reetha (5-6 daany)
  • Cheeni (hasb e zaiqa)
  • Khali capsule (6 adad)

TARKEEB/ISTEMAL

Reetha ky daanon ko guthliyon sy alehda kar lain or dhoop main achi tarha khushk kar lain. Khushk karny ky baad is ka safoof bana lain. Phir is safoof k ham wazan cheeni mila lain or 6 khali capsule k khol main bhar kar mehfooz kar lain.Subh nehar munh 2 capsule pani ya doodh k sath istemal karain. Dawa istemal karny k kam az kam 3 ghanty baad nashta karain. Is ilaj ki muddat sirf 3 din hai isy 3 din sy ziyada istemal na karain warna kisi dusri bemari hony ka andesha hai.

2. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

Yeh nuskha purany sy purany jiryan ka ilaj hai or sailan ur reham jesy amraaz k liye bhe intehai mufeed hai.

AJZAA

  • Satawar 50 gram
  • Sang-e-jarahat khurdani 50 gram
  • Mishri 100 gram

TARKEEB/ISTEMAL

Tamam ajzaa ko koot kar pees lain or mehfooz kar lain. Subh o sham 1+1 chamach paani k sath istemal karain. Is nuskhay k hamrah baisan ki rotti or ghee ka istemal bhe ziyada sy ziyada karain.

3. JIRYAN KA GHARELU ILAJ

AJZAA

  • Sufed Moosli 4 tolah
  • Saboos Ispaghol 2 tolah
  • Maghaz Tukham Tarhindi 1 tolah
  • Nabat 1 tolah

TARKEEB /ISTEMAL

Tamam ajzaa ko achi tarha koot kar pees lain or chaan kar safoof ki shakal main mehfooz kar lain. Aik chamach subh k waqat gaye k doodh k hamrah istemal karain. Is gharelu nuskhy ka ilaaj ka dorania kam az kam aik maah hai.

جریان کا ھربل علاج

گھریلو ٹوٹکے | وجوہات | علامات | جریان کا ھربل علاج

جریان مرد حضرات کے نظام تولید کی ایک بیماری ہے جس میں مرد حضرات کے عضو خاص سے مادہ منی از خود خارج ہونا شروع ہو جاتا ہے۔ اگر یہی عمل رات سوتے وقت ہو تو اسے احتلام کہتے ہیں اور اگر دن کے وقت روز مرہ کے کام سرانجام دینے کے دوران ہو تو اسے جریان کہا جاتا ہے۔

اگر کسی مرد کو ہفتے میں 2-3 مرتبہ جریان کا مسئلہ پیش آئے اور ساتھ میں چکر، ٹانگوں میں کمزوری، کمر میں درد اور نیند نا آئے یا کم آئے تا اسے کثرت جریان کی بیماری سمجھا جاتا ہے۔

عام طور پر نوجوان احتلام کو جریان سمجھنے کی غلطی کر دیتے ہیں اور سمجھتے ہیں کہ اگر عضو خاص سے گاڑھا پانی خارج ہو تو اسے جریان کہا جاتا ہے حالانکہ ایسا نہیں ہے۔ جریان دن کے وقت عضو خاص سے از خود خارج ہونے والے مادہ کو کہا جاتا ہے۔ ایک حالیہ اندازے کے مطابق یہ مرض ہر 10 میں سے 3 مردوں کو لاحق ہے۔

یہ بات بھی سچ ہے کہ مادہ منی ہی انسانی جسم کی بنیاد ہے اور اس کے ازخود خارج ہونے سے جسم کمزورپڑ جاتا ہے جس سے کئی دوسرے امراض بھی لاحق ہو سکتے ہیں۔ یاد رہے کہ اگر یہی علامات اگر خواتین میں موجود ہوں تو اسے لیکوریا کا مرض کہا جاتا ہے۔

herbal cure for spermatorreah

:طب یونانی کی رو سے جریان کا علاج

جریان ایک ایسی بیماری ہے جسکا اگر سہی سے علاج نا کرایا جائے تو یہ مردانہ کمزوری اور نامردی جیسے مسائل کا سبب بنتی ہے۔ طب یونانی میں جریان کا علاج موجود ہے جو بنا کسی مضر اثرات کی کامیاب ترین علاج سمجھا جاتا ہے۔ جیسا کہ ہم سب جانتے ہیں کہ طب یونانی میں امراض کا علاج جڑی بوٹیوں سے کیا جاتا ہے، اسی طرح پیشاب میں منی کا علاج بھی طب یونانی میں موجود ہے جو کہ صدیوں سے آزمودہ اور مجرب علاج سمجھا جاتا ہے۔

:جریان کی علامات

– شدید جسمانی تھکاوٹ

– بھوک کا نہ لگنا یا کم لگنا

– جسمانی اور اعصابی کمزوری

– چکر آنا

– کمر میں درد کا ہونا

– قبض کا رہنا

– جزباتی دباو کا شکار ہونا

– توجہ مرکوز کرنے میں ناکامی

– مادہ منی کا پیشاب میں اخراج ہونا

– پیشاب کا بار بار آنا

– عضو خاص پر خارش ہونا

:جریان کی چار بڑی وجوہات

jaryan-ka-illaj

:ذہنی اور جسمانی دباو

اکثر مرد حضرات جو کمزور اعصاب کے مالک ہوتے ہیں ان میں جریان ہونے کی بنیادی وجہ ذہنی اور جسمانی تھکاوٹ ہوتی ہے۔ دن بھر کےذہنی اور جسمانی دباو کی وجہ سے اکثر مرد حضرات چلتے پھرتے جریان کا شکار ہو جاتے ہیں اور اکثر طبیبوں سے پیشاب میں منی کے قطرے آنے جیسی علامات کے بارے میں پوچھتے ہیں۔

:سگریٹ اور شراب نوشی

سگریٹ اور شراب نوشی بھی جریان ہونے کی وجوہات میں سے ایک وجہ ہے۔ وہ افراد جو کثرت سے تمباکو اور شراب نوشی کرتے ہیں ان کے پھیپھڑوں کے ساتھ ساتھ انکا نظام تولیدی بھی کمزور ہوتا چلے جاتا ہے اور ایک وقت ایسا بھی آتا ہے کہ انتہائی کمزوری کے باعث جریان جیسے مسئلے کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

:جسمانی تھکاوٹ

ایسے افراد جو جسمانی طور پر کمزور ہوتے ہیں اور تھوڑا سا کام کرنے کے بعد شدید تھکاوٹ محسوس کرنے لگتے ہیں انکو بھی جریان کی شکایت ہو سکتی ہے۔

:نیند کا نہ آنا

جریان کی بیماری میں جسم میں بے چینی بہت زیادہ محسوس ہوتی ہے اسی وجہ سے وہ مرد حضرات جن کو جریان کی شکایت ہوتی ہے اکثر نیند نا آنے جیسے مسائل سے دوچار رہتے ہیں جس کی وجہ سے انکی جسمانی حالت دن بہ دن کمزور سے کمزور تر ہوتے چلے جاتی ہے۔

:جریان کا دیسی گھریلو علاج

:#جریان کا گھریلو علاج1

اجزا

ریٹھا 5-6 دانے

چینی حسب ذائقہ

خالی کیپسول 6 عدد

ترکیب / استعمال

ریٹھا کے دانوں کو گٹھلیوں سے علیحدہ کر لیں اور دھوپ میں اچھی طرح خشک کرلیں۔ خشک کرنے کے بعد اس کا سفوف بنا لیں۔ پھر سفوف کے ہم وزن چینی ملا لیں اور 6 عدد خالی کیپسولوں کے خول میں بھر کر محفوظ کرلیں۔ صبح نہار منہ دو عدد کیپسول پانی یا دودھ کے ساتھ استعمال کریں۔ دوا استعمال کرنے کے کم سے کم تین گھنٹے بعد ناشتہ کریں۔ یاد رہے کہ اس علاج کی مدت صرف تین دن ہے اسے تین دن سے زائد استعمال نہ کریں ورنہ کسی دوسری بیماری ہونے کا اندیشہ ہے۔

:#2جریان کا گھریلو علاج

اس نسخے کی مدد سے پرانے سے پرانی جریان کی بیماری کا علاج ممکن ہے۔ یہ نسخہ سیلان الرحم جیسے امراض کے لئے بھی انتہائی مفید ہے۔

اجزا

ستاور 50 گرام

سنگ جراحت خوردنی 50 گرام

مشری 100 گرام

ترکیب / استعمال

تمام اجزا کو کوٹ کر پیس لیں اور محفوظ کرلیں۔ صبح و شام1+1 چمچ پانی کے ساتھ استعمال کریں۔ اس نسخے ہمراہ بیسن کی روٹی اور گھی کا استعمال بھی زیادہ سے زیادہ کریں۔

:#3جریان کا گھریلو علاج

اجزا

سفید موصلی 4 تولہ

سبوس اسپغول 2 تولہ

مغز تخم ترہندی 1 تولہ

نبات 1 تولہ

ترکیب / استعمال

تمام اجزا کو اچھی طرح کوٹ کر پیس لیں اور چھان کر سفوف کی شکل میں محفوظ کرلیں۔ ایک چمچ صبح کے وقت گائے کے دودھ کے ہمراہ استعمال کریں۔ اس گھریلو نسخے کے علاج کا دورانیہ کم سے کم ایک ماہ ہے۔

Package For Spermatorrhea Treatment Rs 1,080

For Any Query Contact us at: 03074409221

buy now
Ajmal Dawakhana

Subscribe To Our Weekly Newsletter

About Our Products, Health Guides, Discount Offers!

You have Successfully Subscribed!